QURBANI KE MASAIL PART 2


قربانی کے مسائل 
مسئلہ 6:  قربانی واجب ہونے کا سبب وقت ہے جب وہ وقت آیا اور شرائط وجوب پائے گئے قربانی واجب ہوگئی اور اس کا رکن اون مخصوص جانوروں  میں  کسی کو قربانی کی نیت سے ذبح کرنا ہے۔ قربانی کی نیت سے دوسرے جانور مثلاً مرغ کو ذبح کرنا ناجائز ہے۔(درمختار)

          مسئلہ 7:  جو شخص دو سو درہم یا بیس دینار کا مالک ہو یا حاجت کے سوا کسی ایسی چیز کا مالک ہو جس کی قیمت دوسو درہم ہو وہ غنی ہے اوس پر قربانی واجب ہے۔ حاجت سے مراد رہنے کا مکان اور خانہ داری کے سامان جن کی حاجت ہو اور سواری کا جانور اور خادم اور پہننے کے کپڑے ان کے سوا جو چیزیں  ہوں  وہ حاجت سے زائد ہیں ۔(عالمگیری وغیرہ)

          مسئلہ 8:  اوس شخص پر دَین ہے اور اوس کے اموال سے دَین کی مقدارمُجرا کی جائے تو نصاب نہیں  باقی رہتی اوس پر قربانی واجب نہیں  اور اگر اس کا مال یہاں  موجود نہیں  ہے اور ایامِ قربانی گزرنے کے بعد وہ مال اوسے وصول ہوگا تو قربانی واجب نہیں ۔ (عالمگیری)

          مسئلہ 9:  ایک شخص کے پاس دو سو درہم تھے سال پورا ہوا اور ان میں  سے پانچ درہم زکوٰۃ میں  دیے ایک سو پچانوے باقی رہے اب قربانی کا دن آیا تو قربانی واجب ہے اور اگر اپنے ضروریات میں  پانچ درہم خرچ کرتا تو قربانی واجب نہ ہوتی۔(عالمگیری)

          مسئلہ 10:  مالکِ نصاب نے قربانی کے لیے بکری خریدی تھی وہ گم ہوگئی اور اس شخص کا مال نصاب سے کم ہوگیا اب قربانی کا دن آیا تو اس پر یہ ضرور نہیں  کہ دوسرا جانور خرید کر قربانی کرے اور اگر وہ بکری قربانی ہی کے دنوں  میں  مل گئی اور یہ شخص اب بھی مالک نصاب نہیں  ہے تو اوس پر اس بکری کی قربانی واجب نہیں ۔ (عالمگیری)

ایک تبصرہ شائع کریں

0 تبصرے